بدھ 26  ستمبر 2018ء
بدھ 26  ستمبر 2018ء

پونچھ سیکٹر میں بھارتی فوج کی شدید گولہ باری ، 7افراد شدید زخمی

ہجیرہ(ملک ذوالفقار سے )بھارتی فوج کی طرف سے کنٹرول لائن پر شدید فائرنگ سے خواتین سمیت سات افراد شدید زخمی ہوگئے جبکہ متعدد مکانات تباہ ہو گئے ، بھارتی فائرنگ سے ایل او سی کے قریب علاقوں میں بجلی و ٹیلی فون کا نظام درہم برہم ہو گیا ، جبکہ تحصیل ہیڈکوارٹر ہسپتال میں ایمر جنسی نافذ کردی گئی ، اطلاعات کے مطابق گزشتہ روز بد کی سہ پہر بھارتی فوج نے بٹل دھرمسال دھر ککوٹہ رکڑ ،مدارپور تیتری نوٹ ڈونگہ کی سیولین آبادی پر گولہ باری شروع کر دی ۔گولہ باری کے نتیجے میں رکڑ منڈھول دھرمسال سے مختلف مکانات کے تباہ ہونے کی اطلاعات ہیں ۔گولہ باری کے نتیجے میں شاہ بیگم ذوجہ علی محمد چوہدری، کونین حفیظ ، ایمان رحیم ، آرزو رحیم ، زاہدہ بیگم ، فرقان تعارف، عدنان آصف زخمی ہوگئے، بعض زخمیوںکوابتدائی طبی امداد کے بعد سی ایم ایچ راولاکوٹ ریفر کر دیا گیا ۔شدید گولہ باری کے نتیجے میں دھرمسال کے رہاشی محمد تعارف محمد آصف اور محمد قاسم کے مکانات پر گولے لگنے سے شدید نقصان پہنچا ۔ہسپتا ل میں ایمرجنسی نافذ کر دی گئی ۔ہسپتال میں موجود سرکاری اور پرائیویٹ ایمبولینسز کنٹرول لائن کے علاقوں میں روانہ کی گئی ۔آخری اطلاع تک گولہ باری جاری تھی ۔ فائرنگ کے واقعات پر مقامی لوگوں نے شدید غم و غصے کا اظہار کیا ہے اور حکومت سے مطالبہ کیا ہے کہ ایل او سی کے متاثرین کی دیکھ بھال کے خصوصی انتظامات کئے جائیں اور حکومت پاکستان سول آبادی پر فائرنگ کا معاملہ عالمی سطح پر اٹھائے اور بھرپور احتجاج کرے ۔