پیر 23 جولائی 2018ء
پیر 23 جولائی 2018ء

ہمیں کمیشن کی متوقع رپورٹ سے نا انصافی کی بو آرہی ہے ،جسٹس فار نعیم بٹ شہید کمیٹی

  راولاکوٹ (سٹی رپورٹر) جسٹس فار نعیم بٹ شہید کمیٹی نے ڈپٹی کمشنر اور ایس ایس پی کے دفاتر کے گھیراﺅ کی ڈیڈ لائن تین دن بڑھا دی ہے ۔اب اگر ڈپٹی کمشنر پونچھ راجہ طاہر ممتاز ، ایس ایس پی پونچھ یاسین بیگ ، اسٹنٹ کمشنر ہجیرہ ، تحصیل دار ہجیرہ ، ایس ایچ او پولیس تھانہ ہجیرہ کو اٹھارہ اپریل شام تک معطل نہ کیاگیاتو انیس اپریل سے دفاتر کا گھیراﺅ کرتے ہوئے ان ملازمین کو دفتر میں نہیں بیٹھنے دیاجائے گا ۔ انیس اپریل کو راولاکوٹ اور ہجیرہ میں مکمل شٹر ڈاﺅن ، مکمل پہیہ جام اور مکمل ہڑتال کی جائے گی ۔سترہ اپریل کی ڈیڈ لائن کو جماعت اسلامی کی جانب سے احتجاجی ریلی میں بھرپور شرکت کے باعث تین دن کیلے ملتوی کیاگیا ہے ۔ ان خیالات کااظہار جسٹس فار نعیم بٹ شہید کمیٹی کے چیئرمین سردار لیاقت حیات (چیئرمین عوامی نیشنل پارٹی) نے ہفتہ کو کچہری چوک راولاکوٹ میں اس احتجاجی ریلی سے خطاب کرتے ہوئے کیا جو اپنے مطالبات کو منوانے کیلئے نکالی گئی تھی ۔ احتجاجی ریلی کا آغاز حسین شہید پوسٹ گریجویٹ کالج راولاکوٹ کے گیٹ سے ہوا تمام بڑی بڑی شاہرات اور مارکیٹوں کا چکر لگانے کے بعد کچہری چوک میں ایک احتجاجی جلسہ کا انعقاد کیا گیا دوران احتجاجی ریلی شہر کی اکثر دکانیں اور کاروباری مراکز کچھ دیر کیلئے بند رہے اس احتجاجی ریلی میں جموں کشمیر لبریشن فرنٹ (یاسین ملک گروپ )، جموں کشمیر لبریشن فرنٹ (رﺅف کشمیری گروپ)، نیشنل عوامی پارٹی ، این ایس ایف ، راولاکوٹ انجمن تاجران اور دیگر سیاسی وسماجی جماعتوں اور تنظیموں کے لوگوں نے بھرپور شرکت کی ۔ریلی کی قیادت سردار لیاقت حیات ، سردار محمد قدیر خان، سردار صابر کشمیری ایڈووکیٹ، ایس ایم ابراہیم ایڈووکیٹ، انجمن تاجران آزادکشمیر کے سپریم ہیڈ سردار محمد نعیم خان، مرکزی ترجمان انجمن تاجران سردار وسیم خورشید، اور انجمن تاجران کے دیگر عہدیداران نے کی ۔ مقررین نے کہاکہ انکوائری کمیشن کے چیئرمین کو انکوائری شروع کرنے سے قبل ذمہ دار آفیسران کو ان کے عہدوں سے ہٹانا چاہیے تھا ۔کس قدر افسوس کا مقام ہے کہ اس سانحہ کے ذمہ داران نے اپنی گاڑیوں پر جھنڈیا ں لگا کر پورے سرکاری پروٹوکول کے ساتھ کمیشن کے سامنے اپنے بیانات ریکارڈ کروائے اور کمیشن نے انہیں ان کی خاطر تواضع بھی کی ان زعماءنے کہا کہ ہمیں کمیشن کی رپورٹ سے نا انصافی کی بو آرہی ہے ۔اور ہمیں پورا یقین ہے کہ یہ انکوائری کمیشن ذمہ دارآفیسران کے خلاف کسی کاروائی کی سفارش نہیں کرے گا بلکہ حکومت کے کہنے پر ان کی مرضی کی رپورٹ دے گاان زعما ءنے کہا کہ جب تک نعیم شہید کے قاتلوں کو کیفر کردار تک نہیں پہنچایا جاتا ہماری یہ تحریک جاری رہے گی کمیٹی کے چیئرمین سردار لیاقت حیات نے کہا کہ ضلعی انتظامیہ اندرون خانہ نعیم بٹ شہید کے ورثا ءپر زور دے رہی ہے کہ وہ معقول معاوضہ دہیت کے نام پر لے کر دستبردار ہوجائیں ہم واضح کر دینا چاہتے ہیں کہ نعیم بٹ شہید کی فیملی کو د ہیت دینا ریاست کی ذمہ داری ہے ۔اگر اٹھار ہ اپریل شام تک معقول دہیت ادانہ کی گئی تو اس کے بعد کوئی دہیت وصول نہیں کی جائے گی ۔انہوں نے کہا کہ ڈپٹی کمشنر پونچھ اور ایس ایس پی پونچھ کو فوری طور پر معطل کر کے ان کے خلاف قتل کا مقدمہ چلایاجائے اس سے کم کسی بھی بات پر عوام تیار نہیں ہیں ۔انہوں نے واضح طور پر اعلان کیا کہ سترہ اپریل کو دفتر ی گھیراﺅ کی کال میں انیس اپریل تک توسیع کی جاتی ہے کیونکہ جماعت اسلامی نے اس خواہش کا اظہار کیا ہے کہ وہ بھی بھرپور طریقے سے احتجاجی ریلی میں شرکت کرنا چاہتے ہیں

آج کااخبار

سب سے زیادہ پڑھی جانے والی خبریں

کالم