اتوار 21 اکتوبر 2018ء
اتوار 21 اکتوبر 2018ء

میٹرک پاس پرائمری اساتذہ کی جبری ریٹائرمنٹ عارضی طور پر موخر

مظفرآباد ( دھرتی نیوز)سیکرٹریٹ ایلیمنٹری و سیکنڈری ایجوکیشن کی طرف سے جاری نوٹیفکیشن کے مطابق میٹرک پاس پی ٹی سی معلمین و معلمات کی ریٹائرمنٹ کے حوالہ سے نوٹیفکیشن پر عمل درآمد کو عارضی طور پر روک دیا ہے یہ قدم محکمہ مالیات کی طرف سے مالی مضمرات کے پیش نظر اٹھایا گیا ہے ۔ دوسری جانب آزادجموں وکشمیر سروس ٹربیونل نے اساتذہ جبری فراغت کیس کا فیصلہ محفوظ کر لیا،چیئرمین خواجا محمد نسیم نے آئندہ تاریخ سماعت 2مئی مقرر کر دی ،گزشتہ روز ضلع پونچھ کی جانب سے معروف قانون دان سردار محمد ریاض خان ایڈووکیٹ اور ضلع باغ کی جانب سے شفقت گردیزی ایڈووکیٹ نے متاثرہ اساتذہ کی جانب سے دلائل پیش کرتے ہوئے ہوئے کہا کہ حکومت کی جانب سے اساتذہ کو جبری فراغت کیا جانا معاشی قتل کے مترادف ہے ،حکومت نے اساتذہ کو بغیر سماعت کیے فراغت کا نوٹی فکیشن جاری کر دیا جب کہ محکمہ مالیات نے بھی اپنے مکتوب میں پنشن ادائیگی سے معذرت کر لی ہے ،لہٰذا عدالت حکومتی نوٹی فکیشن کو معطل کرے ،چیئرمین سروس ٹریبونل نے درخواست گزاران کی جانب سے دلائل سننے کے بعد فیصلہ محفوظ کرتے ہوئے آئندہ تاریخ سماعت 2مئی مقرر کر دی ہے ،یاد رہے آزادجموں وکشمیر عدالت العالیہ پہلے ہی اساتذہ کی جبری فراغت کا نوٹی فکیشن معطل کر چکی ہے،سروس ٹریبونل کا فیصلہ آنے کے بعد ہزاروں اساتذہ کا مستقبل محفوظ ہونے کی توقع ہے ،ادھر متاثرہ اساتذہ نے کل مرکزی ایوان صحافت کے باہر احتجاجی دھرنے کا اعلان بھی کر رکھا ہے، واضح رہے کہ قبل ازیں ہائی کورٹ نے بھی پرائمری اساتذہ کی جبری ریٹائرمنٹ کا نوٹیفکیشن معطل کر دیا تھا