پیر 10 دسمبر 2018ء
پیر 10 دسمبر 2018ء

آزادکشمیر کے میڈیکل کالجز میں داخلوں کیلئے اجلاس طلب کر لیا نے NUMS آزاد حکومت بے خبر ،

راولاکوٹ ( دھرتی نیوز ) آزادکشمیر کے تینوں میڈیکل کالجز میں سیشن 2018-19 ءکیلئے ایم بی بی ایس سال اول کے داخلوں کے طریقہ کار پر جائنٹ ایڈمیشن کمیٹی کے احتجاج کے باوجود نیشنل یونیورسٹی آف میڈیکل سائنسز NUMSنے اپنے کیمپس میں اجلاس 22نومبر کو طلب کر لیا ، قبل ازیں یہ میرٹ لسٹ جائنٹ ایڈمیشن کمیٹی بنائی تھی اور تینوں کالجوں میں کوٹہ سسٹم نافذ ہونے کی وجہ سے یہ کمیٹی بہتر انداز میں داخلے کرتی تھی ، NUMSنے یہ فیصلہ وفاقی وزارت صحت کے اس فیصلے کے بعد کیا ہے جس کے تحت اسے میڈیکل کالجز جہاں میڈیکل یونیورسٹیز نہیں ہیں ان میڈیکل کالجز کا الحاق نیشنل یونیورسٹی آف میڈیکل سائنسز کے ساتھ کیا جائے گا ، آزادکشمیر کے ان تینوں میڈیکل کالجز ، پونچھ ، میرپور اور مظفرآباد کا الحاق یونیورسٹی آف ہیلتھ سائنسز لاہور UHSکے ساتھ تھا اور بہتر انداز سے چل رہا تھا لیکن وفاقی حکومت کے فیصلے کے بعد NUMSنے ان کالجز کا الحاق اپنے ساتھ از خود ہی کر لیا اور پہلے اس بات پر بضد رہے کہ وہ انٹری ٹیسٹ بھی از خود لیں گے لیکن جائنٹ ایڈمیشن کمیٹی کے اصرار پر NUMSکی انتظامیہ اس بات پر راضی ہوئی کہ رواں سیشن کے دوران داخلوں کے وقت وہ UHSکے انٹری ٹیسٹ کو ہی قبول کر لیں گے لیکن داخلے کیلئے میرٹ لسٹ وہ از خود بنائیں گے ، NUMSکے اس فیصلے پر طلبہ اور ان کے والدین سخت پریشان ہیں ، انہوں نے حکومت آزادکشمیر سے مطالبہ کیا کہ وہ میڈیکل کالجز کا سابقہ یونیورسٹی سے الحاق بحال رکھنے کیلئے اپنا کردار ادا کریں ۔

آج کااخبار

سب سے زیادہ پڑھی جانے والی خبریں

کالم