پیر 10 دسمبر 2018ء
پیر 10 دسمبر 2018ء

راولاکوٹ ضمنی الیکشن جیت کر قیادت کو تحفہ دیں گے ، الماس گردیزی

راولاکوٹ ( دھرتی نیوز ) پاکستان مسلم لیگ ن آزادکشمیر شعبہ خواتین کی مرکزی سیکرٹری جنرل ، امیدوار قانون ساز اسمبلی حلقہ ایل اے 19پونچھ 3راولاکوٹ سید ہ الماس گردیزی نے کہا ہے کہ کارکنان کی مشاورت سے ضمنی الیکشن میں حصہ لینے کا فیصلہ کیا ہے ، توقع ہے کہ قیادت میرٹ پر ٹکٹ کا فیصلہ کرے گی، قیادت نے اعتماد کیا تو یہ نشست ضرور جیتیں گے ، اس حلقہ میں مسلم لیگ ن اس وقت ایک مضبوط قوت کے طور پر سامنے آرہی ہے اور وزیر اعظم آزادکشمیر راجہ فاروق حیدر کی قیادت میں ہجیرہ کے ضمنی الیکشن کی طرح راولاکوٹ کا ضمنی الیکشن بھی جیت کر قیادت اور عوام کو بہترین تحفہ دیں گے ، وزیر اعظم آزادکشمیر جو کہ خواتین کا بہت احترام کرتے ہیں اور خواتین کو اقتدار میں شریک کرنے کے حامی ہیں اس لئے توقع ہے کہ وہ آزادکشمیر بھر کی خواتین کی نمائندگی کیلئے حلقہ تین کے ٹکٹ کا فیصلہ میرٹ کی بنیاد پر کریں گے اور قیادت نے جو بھی فیصلہ کیا وہ سب کیلئے قابل قبول ہو گا۔ یہ بات انہوں نے گزشتہ روز روزنامہ دھرتی کے دفتر میں خصوصی گفتگو کے دوران کیا ، انہوں نے کہا کہ خواتین ونگ کی سیکرٹری جنرل ہونے کی حیثیت سے مجھ پر جو ذمہ داریاں عائد ہو تی ہیں وہ بخوبی ادا کیں اور مستقبل میں اس روش کو جاری رکھاجائے گا،انہوں نے کہا کہ سردار خالد ابراہیم خان کی وفات پوری قوم کیلئے المیہ ہے ، ان کی خدمات کو ہمیشہ یاد رکھا جائے گا ، ان کی اصول پرستی ، رواداری اور دیانتداری دیگر تمام سیاسی رہنماؤں کیلئے قابل تقلید ہے ، ان کی وفات سے ہونیوالے نقصانات کا ازالہ بھی ممکن نہیں ، ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ سردار خالد ابراہیم خان موروثی سیاست کے خلاف تھے ،اگر تمام جماعتیں رواداری کے طور پر الیکشن میں حصہ نہ لیکر ان کے بیٹے کو اسمبلی میں بھیجتے تو یہ اچھی مثال قائم ہوتی لیکن جب دیگر جماعتیں الیکشن میں حصہ لے رہی ہیں تو ان حالات میں مسلم لیگ ن کا بھی حق ہے کہ وہ الیکشن میں حصہ لے ، جے کے پی پی اگر کسی سنیئر رہنما کو ٹکٹ دیتی اس سے سردار خالد ابراہیم کے اصولوں کی پیروی ہو تی ، ان کے پاس نبیلہ ارشاد جیسی سنیئر امیدوارہ موجود تھیں انہیں اگر نمائندگی کے لئے سامنے لایا جاتا تو اس سے جمہوری روایات کو فروغ ملتا تاہم یہ ان کا اندرونی معاملہ جس میں ہمیں دخل اندازی کا حق نہیں اور نہ ہی ہم کسی دوسری جماعت کے فیصلوں کو تنقید کا نشانہ بناناچاہتے ہیں ، انہوں نے کہا کہ عوامی مسائل کو مد نظر رکھتے ہوئے انتخابات میں آنے کا فیصلہ کیا ہمیشہ عوامی خدمت کو مقدم اور خواتین کو با اختیار بنانے کے لئے جدوجہد کی ہے توقع ہے کہ جماعتی قیادت ٹکٹ کا فیصلہ بھی میرٹ پر کرے گی تاکہ خواتین کی حوصلہ افزائی ہو اگر پارٹی قیادت نے اعتماد کیا تو سیٹ جیت کر قیادت کو تحفہ میں دونگی اس وقت حکومت آزادکشمیر راجہ فاروق حیدر کی قیادت میں اس خطے کو حقیقی معنوں میں ترقی سے ہمکنار کرنے کے لئے کوشاں ہے حلقہ کے عوام سے بھی توقع ہے کہ انتخابات میں مسلم لیگ ن پر بھر پور اعتماد کا اظہار کریں گے۔

آج کااخبار

سب سے زیادہ پڑھی جانے والی خبریں

کالم