پیر 10 دسمبر 2018ء
پیر 10 دسمبر 2018ء

مظفرآباد،برفانی چیتے کے تحفظ کے لیے پانچ سالہ منصوبے پر کام شروع

مظفرآباد( دھرتی نیوز )آزادکشمیرکی وادی نیلم میں برفانی چیتے کی موجودگی کی نشاندہی ہونے کے بعد اس نایاب نسل کے چیتے کے تحفظ کیلئے محکمہ جنگلی حیات حکومت آزادکشمیر،پاکستان اورغیر سرکاری تنظیم سنو لیپرڈ فاؤنڈیشن کے اشتراک سے پانچ سالہ منصوبے پر کام شروع کردیا گیا ہے۔ اس سلسلہ میں افتتاحی تقریب ،ورکشاپ کا انعقادمظفرآباد کے مقامی ہوٹل میں کیا گیا ۔یہ بر فانی چیتا ایک انتہائی نایا ب جنگلی جا نور ہے جو کہ بشمول پاکستان 12 دیگر ممالک میں پایا جا تا ہے اورمختلف انسانی منفی اقدامات جسمیں جنگلات کا کٹاؤ ، بے جا شکا ر ، ماحولیا تی تبدیلیوں کی وجہ سے بر فانی چیتے کی نسل کو خطرات لاحق ہیں اور اگر ان منفی سرگرمیوں کا تدارک نہ کیا گیا تو آئندہ چند بر سوں میں بر فانی چیتا کی نسل معدومی کے خطرات سے دوچا ر ہو سکتی ہے آزاد کشمیر میں نیلم ویلی واحد جگہ ہے جسمیں وادی گریس ، شونٹھر ویلی ، گھموٹ نیشنل پارک ، مچھیارہ نیشنل پارک میں بر فانی چیتے کی موجودگی کے اثرات ملے ہیں۔ورکشاپ کے مہمان خصوصی وزیر وائلڈ لائف فشریز ناصر حسین ڈارتھے جبکہ صدرات سیکرٹری جنگلات ڈاکٹر شہلا وقار نے کی جبکہ سابق ڈائریکٹر جنرل شیخ قیوم صاحب، ڈائریکٹر جنرل ماحولیات،ڈائریکٹر جنرل سیاحت، ڈائریکٹر جنرل زراعت، ڈائریکٹر جنرل آڈٹ، مینجنگ ڈائریکٹرسمال انڈسٹریز، ناظم اعلیٰ جنگلات ، پروفیسر صاحبان و طلبا ء آزادکشمیر یونیورسٹی مظفرآباد، میرپور یونیورسٹی (MUST) و آفیسران محکمہ وائلڈلائف وفشریز اور میڈیا کے نمائندگان شامل تھے ۔وزیر ٹر انسپورٹ ، وائلڈلائف وفشریز آزاد کشمیر اور سیکرٹری جنگلات ، وائلڈلائف وفشریز نے منصوبہ کے حوالہ سے کیے کام پر محکمہ وائلڈلائف وفشریز اور سنولیپرڈ فاؤنڈیشن کی کا وشوں کو سراہا ا ور ہدایت کی کہ آزاد کشمیرمیں جہاں برفانی چیتا انتہائی اہمیت کا حامل ہے وہاں دیگر جنگلی حیا ت کا تحفظ بھی ضروری ہے اور یہ اسی صورت میں ممکن ہے کہ مقامی لوگوں میں جنگلات و جنگلی حیا ت کے تحفظ و فروغ کیلئے آگاہی فراہم کی جا ئے۔ اس موقع پر نعیم افتخار ڈار ناظم وائلڈلائف وفشریز آزادکشمیر نے بریفنگ دیتے ہو ئے بتایا کہ آزادکشمیر میں بر فانی چیتا ضلع نیلم کے بالائی ایریا مسک ڈئیر نیشنل پارک ، شونٹھر ویلی اور گھموٹ نیشنل پارک سے لے کر مچھیارہ نیشنل پارک تک کم تعداد میں پایا جا تاہے لیکن ابتدائی طورپر اس پراجیکٹ کے تحت مسک ڈئیر نیشنل پارک گریز ، شونٹھر و سرگن ویلی میں بر فانی چیتا کے تحفظ و فروغ کیلئے اقداما ت عمل میں لائے جائیں گے منصوبہ کے حوالہ سے سنو لیپرڈ فاؤنڈیشن کی جانب سے جعفر الدین اور شعیب حمید نے پریزنٹیشن دیں اور بتایا کہ منصوبہ کے آغاز میں بالا نیلم ویلی کے دیہی علاقوں جوکہ برفانی چیتا کے مساکن کے قریب واقع ہیں میں دیہی تحفظاتی کمیٹیاں تشکیل دیتے ہو ئے ان میں شعور کی آگاہی کے اقداما ت عمل میں لائے جائیں گے ورکشاپ کے آخر میں جنا ب وزیر ٹر انسپورٹ، وائلڈلائف وفشریز اور محترمہ سیکرٹری جنگلات، وائلڈلائف وفشریز نے ورکشاپ کے تما م شرکا ء کا شکر یہ ادا کیا اور اس با ت کی یقین دہانی کر وائی کہ حکومت کی جانب سے نہ صرف بر فانی چیتا بلکہ تمام جنگلی حیا ت کے تحفظ و فروغ کے حوالہ سے ہر ممکن اقدامات اٹھائے جائیں گے ۔ 

آج کااخبار

سب سے زیادہ پڑھی جانے والی خبریں

کالم