جمعرات 14 نومبر 2019ء
جمعرات 14 نومبر 2019ء

محکمہ برقیات کے برطرف ملازم کی اپیل سماعت کے لیے منظور،برطرفی کا حکمنامہ معطل

 راولاکوٹ ( دھرتی نیوز ) سروس ٹریبونل آزاد جموں و کشمیر ( راولاکوٹ کیمپ ) نے محکمہ برقیات کے برطرف ملازم اعجاز شاہسوار کی اپیل منظور کرتے ہوئے ان کی برطرفی کا حکم آئندہ تاریخ سماعت تک معطل کر دیا ہے ، اعجاز شاہسوار جو کہ محکمہ برقیات میں اسسٹنٹ لائن مین ہیں اور فنی ملازمین کے صدر بھی ہیں کو 23-01-2019 کو اسپیشل پاور ایکٹ کے تحت نوکری سے برطرف کر دیا تھا ، ان پر مبینہ طور پر ایسے الزامات عائد کیے گئے تھے جن کو بنیاد بنا کر سپرنٹنڈنٹ انجینئر ( ایس ای ) نے اپنے اختیارات استعمال کرتے ہوئے برطرف کیا ، اعجاز شاہسوار کی برطرفی کیخلاف فنی ملازمین کی تنظیم نے جنوری سے ہی ہڑتال کر رکھی ہے اور بعد ازاں دیگر غیر جریدہ ملازمین تنظیموں اور ایپکانے بھی اس احتجاج میں ان کا ساتھ دیا اور ہڑتال کا یہ سلسلہ آج تک جاری ہے۔ اس دوران اعجاز شاہسوار نے محکمانہ اپیل بھی کی جس کی سماعت بھی مکمل ہو چکی ہے لیکن ابھی فیصلہ آنا باقی ہے ، ملازمین کی ہڑتال ابھی جاری ہے لیکن چند دن قبل اعجاز شاہسوار نے اس محکمانہ فیصلے کیخلاف سروس ٹریبونل ( راولاکوٹ کیمپ ) میں اپیل کی ، اعجاز شاہسوار کی جانب سردار طاہر انور ایڈووکیٹ اور امجد ممتاز ایڈووکیٹ پیش ہوئے ، سروس ٹریبونل کے چیئرمین خواجہ محمد نعیم نے اپیل کی سماعت کی اور اسے قابل سماعت ٹھہراتے ہوئے 23-01-2019 کو جاری کیے گئے برطرفی کے آرڈر کو معطل کر دیا اور آئندہ تاریخ سماعت پر فریقین سے عذرات طلب کر لیے ، سروس ٹریبونل کے اس فیصلے کے بعد ہڑتالی ملازمین کی تنظیموں نے آج دس بجے اجلاس طلب کر لیا ۔وہ بعد ازاں ڈپٹی کمشنر سے ملاقات کے بعد آئندہ کے لائحہ عمل کا اعلان کریں گی۔ایپکا کے ضلعی صدر سردار آصف حنیف کے مطابق اجلاس میں دوران ہڑتال معطل کیے گے ملازمین کا معاملہ بھی زیر غور آئے گا۔