بدھ 15  اگست 2018ء
بدھ 15  اگست 2018ء

مقبوضہ کشمیر میں بھارتی جارحیت ،پاکستان چھ مالک میں اپنے نمائندے بھیجے گا

مظفر آباد (دھرتی نیوز)وزیراعظم شاہد خاقان عباسی نے کہا ہے کہ پاکستان مقبوضہ کشمیر میں بھارتی جارحیت کو اجاگر کرنے کے لئے چھ اہم ملکوں میں اپنے نمائندے بھیجے گا۔وہ بدھ کے روز مظفر آباد میں حریت کانفرنس کے نمائندوں سے گفتگو کررہے تھے۔وزیراعظم شاہد خاقان عباسی سے حریت کانفرنس کے نمائندوں نے ملاقات کی، ملاقات میں وزیر اعظم آزاد کشمیر فاروق حیدر، صدر آزاد کشمیر سردار مسعود ، کشمیر کمیٹی کے سربراہ مولانا فضل الرحمان،وزیر خارجہ خواجہ آصف، وفاقی وزیر برجیس طاہر، غلام محمد صفی،فیض نقشبندی، محمود ساگر، اشتیاق حمید،شمیم شال اور اعجاز لون موجود تھے۔ حریت رہنماوں نے وزیراعظم کو مقبوضہ کشمیر میں حالیہ صورتحال سے آگاہ کیا۔اس موقع پر وزیر اعظم نے کہا کہ وہ کشمیری عوام سے اظہار یکجہتی کیلئے آزادکشمیر آئے ہیں، پاکستان پہلے بھی کشمیری بھائیوں کی جدوجہد میں شانہ بشانہ کھڑا رہا اور آج بھی کھڑا ہے، حکومت اور پاکستان کے عوام مقبوضہ کشمیر کے عوام کی سیاسی، سفارتی اور اخلاقی حمایت جاری رکھیں گے، کابینہ کے خصوصی اجلاس میں بھارتی فوج کے ظلم اور جبر کی شدید مذمت کی گئی، وفاقی کابینہ نے 6اپریل کو یوم یکجہتی کشمیر منانے کا اعلان کیا، پاکستان مسئلہ کشمیر کے حل کیلئے ہر سطح پر کاوشیں جاری رکھے گا، سفارتی مشنز سلامتی کونسل کی قراردادوں پر عملدرآمد کرانے کے لیے متحرک ہیں۔وزیراعظم نے کہا کہ پاکستان بھارتی جارحیت اور مظالم کا شکار افراد کے مطالبات کا ساتھ دے گا۔ انہوں نے کہا کہ مقبوضہ کشمیر کے علاقے شوپیاں اور اننت ناگ میں بھارتی قابض فوج کے ہاتھوں اٹھارہ سے زائد کشمیریوں کے قتل عام کی شدید مذمت کرتے ہیں۔انہوں نے کہا کہ کشمیر کی تحریک آزادی کو دہشت گردی قرار دینے کی بھارتی کوششیں جموں و کشمیر کے بہادر عوام کو مرعوب نہیں کر سکتیں جو اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کی قراردادوں کے مطابق اپنا حق خودارادیت مانگ رہے ہیں۔ وزیراعظم شاہد خاقان عباسی کا کہنا ہے کہ کشمیریوں کی آواز جبر سےدبانا بھارت کا ناکام ایجنڈا ہے۔

آج کااخبار

سب سے زیادہ پڑھی جانے والی خبریں

کالم